Post has shared content

Post has shared content

Post has shared content
Ooooppsss!!!  can't get my spoon, please some body help me? 
Animated Photo

Post has shared content
Nice Quote..
Don't wait for others to be good but make your self Good and show them, how the Good Person is??
agreed??
Photo

Post has shared content

Post has shared content
حضرت سلیمان علیہ السلام اپنے ساتھیوں اور مومنین کے ساتھ بیٹھے تھے۔۔۔۔
محفل میں گفتگو ہو رہی تھی کہ اتنے میں ایک اجنبی شخص نہایت خوبصورت حلیئے میں عمدہ پوشاک پہنے اور اعلٰی وضع قطع کے ساتھ مجلس میں داخل ہوا۔۔۔۔
سلام کے بعد سیدنا سلیمان علیہ السلام کے سامنے آکر بیٹھ گیا ۔۔۔۔ کچھ دیر باتیں کیں اور پھر رخصت لے کر واپس چلا گیا ۔۔۔۔ لیکن اس تمام وقت میں وہ سلیمان علیہ السلام کے پاس بیٹھے ایک ساتھی کو مسلسل متعجب نظروں سے دیکھتا رہا ۔۔۔۔
جب وہ شخص محفل سے چلا گیا تو سیدنا سلیمان علیہ السلام کے اس ساتھی نے دریافت فرمایا " اے اللہ کے نبی ۔۔۔ یہ اجنبی شخص جو آپ کے پاس آیا تھا ۔۔۔ یہ کون تھا۔۔۔۔؟"
سلیمان علیہ السلام نے بتایا " میرے پاس جو شخص بیٹھا تھا وہ ملک الموت (موت کا فرشتہ) تھا۔۔۔۔"
ان کے ساتھی نے جب موت کے فرشتہ کا ذکر سنا تو اس کا رنگ فق ہو گیا ۔۔۔۔ جسم کپکپانے لگا اور اس نے سلیمان علیہ السلام سے عرض کی " یہ شخص مجھے بہت غور سے دیکھتا رہا ۔۔۔۔ اور مجھے یہ جان کر گھبراہٹ ہونے لگی ہے کہ یہ موت کا فرشتہ تھا ۔۔۔۔ اے اللہ کے نبی ۔۔۔۔ ہوا آپ کے تابع ہے ۔۔۔۔ آپ ہوا کو حکم کریں کہ مجھے یہاں سے دور ہندوستان میں چھوڑ آئے۔۔۔۔"
حضرت سلیمان علیہ السلام نے اس کی درخواست قبول کر لی ۔۔۔۔ ہوا کو حکم دیا کہ اس شخص کو ہندوستان منتقل کر دو۔۔۔۔!
اس واقعے کو ابھی تھوڑی ہی دیر گزری تھی کہ ملک الموت دوبارہ سیدنا سلیمان علیہ السلام کی خدمت میں حاضر ہوا۔۔۔۔ وہ شخص نظر نہ آیا تو سلیمان علیہ السلام سے پوچھا "آپ کا ساتھی کہاں گیا۔۔۔ِ۔؟؟"
سلیمان علیہ السلام نے فرمایا "تیرے ڈر اور خوف کی وجہ سے ہوا نے اسے ہندوستان منتقل کر دیا۔۔۔۔"
ملک الموت کہنے لگا "اے اللہ کے نبی ۔۔۔ جب تھوڑی دیر پہلے میں آپ کی مجلس میں آیا تھا تو اس شخص کو یہاں آپ کے پاس دیکھ کر بہت تعجب ہوا۔۔۔۔ کیونکہ اللہ عزوجل نے مجھے حکم دیا تھا کہ کچھ ساعت بعد تو نے ہندوستان کے فلاں علاقے سے اس شخص کی روح قبض کرنی ہے ۔۔۔۔ اور یہ ہندوستان سے ہزاروں میل دور یہاں آپ کے پاس بیٹھا تھا۔۔۔ اس لئے مجھے اس شخص پر حیرت ہوئی کہ ہندوستان مہینوں کی مسافت پہ ہے تو آج یہ شخص ہندوستان کیسے پہنچے گا ۔۔۔۔ لیکن سبحان اللہ ۔۔۔۔ جب میں مقررہ وقت پر ہندوستان پہنچا تو یہ شخص وہیں تھا ۔۔۔۔ سو میں نے اس کی روح قبض کر لی ۔۔۔۔"

فَاِذَا جَآءَ اَجَلُہُمۡ لَا یَسۡتَاۡخِرُوۡنَ سَاعَۃً وَّ لَا یَسۡتَقۡدِمُوۡنَ (الاعراف: 34)
پس جب وہ موت کا وقت آجاتا ہے تو نہ ہی ایک لمحہ تاخیر ہوتی ہے اور نہ ہی جلدی۔
Photo

Post has shared content

Post has shared content

Post has shared content

Post has shared content
Wait while more posts are being loaded