Post has shared content

Post has shared content

Post has attachment
Photo

Post has attachment
Photo

Post has attachment
Photo

Post has shared content



ALLAH O AKBAR
✴ ✴ ✴ ✴ ✴

السلام علیکم و رحمۃ اللہ و برکاته

جو خوش نصیب لوگ مساجد کے محراب و ممبر کے زینت ہیں یعنی امام و خطیب ہیں انہیں کبهی کبهی اپنی شناخت چهپا کر پچهلی صفوں میں آکر بیٹهنا اور نمازیں ادا کرنا چاہئے .. اس سے وہ اپنے بارے میں بهی بہت کچھ جان سکیں گے کہ لوگوں کے ان کے بارے میں خیالات کیا ہیں اور عام مقتدی کو درپیش مسائل سے بهی واقف ہو سکیں گے ...
تاریخ بتاتی ہے جو خلیفہ یا حکمران اپنی شناخت چهپا کر عام لوگوں کی خبر گیری کرتے تهے وہی حقیقت سے واقف ہوتے تهے اور اس طرح عوام الناس کی رائے جان کر اپنی اصلاح کرتے تهے .. ورنہ ان بڑے لوگوں کے اطراف منافقوں اور چاپلوسوں کا ٹولا انہیں کبهی بهی حقیقت سے واقف ہونے نہیں دیتا اور اس طرح سب اچها ہے، انہیں تباہی و بدنامی کے گڑھے میں ڈال دیتا ...

حضرت عمر فاروق رضی اللہ تعالٰی عنہ کی مثال لیجئے ... ان کا عوام کی حالات جاننے کیلئے راتوں کو نکلنا بے مثال تها ... اور اپنے اس عمل سے انہوں نے ملک و ملت کی کتنی خدمات انظام دیئے اور کیسی کیسی نئی قانوں مرتب کئے جسے آج کی ترقی یافتہ ممالک اپنائے ہوئے ہے

بعد میں آنے والے جس حکمراں نے بهی حضرت عمر فاروق رضی اللہ تعالٰی عنہ کی اس سنت کو اپنایا وہ تاریخ میں ایک بے مثال مقام پیدا کیا ..

اب تو مسلمانوں میں ایسے حکمراں ہی نہیں جو اپنی دولت بنانے کے آگے بهی کوئی ویڑن رکهتے ہوں
... لیکن آج بهی اگر کوئی حکمراں یا کوئی بهی صاحب اقتدار حضرت عمر فاروق رضی اﷲ عنہ کی اس سنت کو اپنائے گا وہ اپنے بارے میں عوام الناس کی صحیح رائے جان سکے گا اور اپنی بہتر اصلاح کر سکے گا اور تاریخ میں امر ہوجائے گا ..

آج بهی حضرت عمر فاروق رضی اللہ تعالٰی عنہ کی اس سنت کو ہم ہر سطح پر اپنا سکتے ہیں ...

جیسے اگر ہم کسی کمپنی کے مالک ہیں یا کسی کمپنی میں اونچے عہدے پر ہیں تو اس سنت کو اپنا کر اپنے بارے میں اپنی اسٹاف کی رائے اور ان کے مسائل جان سکتے ہیں اور اپنی اور کمپنی کی اصلاح کر سکتے ہیں

... مساجد کے امام و خطیب کے بارے میں اوپر لکھ چکا ہوں
... آج اس قحط الرجال کے دور میں ہمیں حضرت عمر فاروق رضی اللہ تعالٰی عنہ کی اس سنت پر عمل کرنے کی اسد ضرورت ہے ..
کاش لوگ سمجهیں اور عمل کریں !
Photo

Post has attachment
IN shah ALLAH starting from towmarrow fajar prayer
Photo

Post has shared content


Done Is Done
👍👍👍👍👍
Photo

Post has shared content

پاکستان کی موبائل فون کمپنیز چور نہیں ڈکیت ہیں اور عوام مظلوم نہیں جاہل ہیں جو ان کو چیلنج نہیں کرتے۔ گزشتہ ماہ پاکستان کا سفر کیا۔ ایئر پورٹ پر اترتے ہی موبائل سم خریدی۔ موبائل میں سم ڈالی اور =/3000 روپے کا بیلینس کروایا۔ گاڑی میں بیٹھ کر ایک کال کی، کال کے فوری بعد ایک مسیج آیا۔ U فون نے مجھے پیغام بھیجا کہ اس کال کے عوض آپ کے =/15 روپے کٹ گئے لیکن انوکھی بات یہ تھی کہ ٹیکس ان کے علاوہ تھا۔ میں نے نمائندہ کو فون کیا علم ہوا 11 روپے کی کال تھی 4 روپے ٹیکس تھا۔ نمائندہ نے مجھے بیوقوف بناتے ہوئے کہا کہ آپ نے دوسرے نیٹ ورک پر بات کی اس لئے کال کی قیمت اور ٹیکس کی رقم ذائد ہے۔ میں نے نمائندے سے پوچھا کہ کیا میں نے انڈین نیٹ ورک پر کال کی؟ یا پھر آپ پاکستان کا نیٹ ورک نہیں ہیں۔ سوال سے سوال نکلے علم ہوا کہ جس رقم تین ہزار کا میں نے بیلنس کروایا اس میں سے بھی 750 روپے ٹیکس کاٹ لیا گیا۔ اب میں مکمل طور پر چپ ہو گئی اور نمائندہ ہیلو ہیلو کرکے فون بند کر گیا۔
میں یہ سوچ رہی تھی کہ ایک ہی رقم پر دو بار ٹیکس اس ملک کو تو سوپر پاور ہونا چاہیے کیونکہ میں گزشتہ 10 سال سے Du اور اتصلات کی سروس استمعال کر رہی ہوں۔ اتصلات میں میرا سم 5 ہے، میں 100 درہم کا بیلنس کرواؤں تو 125 درہم مجھے ملتے ہیں اور ساتھ انٹرنیشنل 120 منٹ فری ملتے ہیں۔ اور سو درہم کا بیلنس ایک ماہ کے لئے کافی ہوتا ہے۔ جبکہ انٹرنیٹ کے لئے مجھے 30 روپے میں ان_لمیٹڈ وائی فائی، 10 جی بی سپیڈ ملتا ہے۔ پاکستان کی موبائل کمپنیاں اور حکومت مل کر لوگوں کو اتنی بری طرح لوٹ رہی ہیں کہ جس کی مثال قوم_شعیب میں بھی نہیں ملتی۔
آئیں مل کر اگلے چند دن موبائل کمپنیوں کے خلاف ہم ایک آگاہی مہم چلائیں۔ آپ بھی لک
دبئی سے آنے والی ایک پاکستانی خاتون نے یہ میسیج کیا ہے آپ بھی ملاحظہ فرمایں

پاکستان کی موبائل فون کمپنیز چور نہیں ڈکیت ہیں اور عوام مظلوم نہیں جاہل ہیں جو ان کو چیلنج نہیں کرتے۔ گزشتہ ماہ پاکستان کا سفر کیا۔ ایئر پورٹ پر اترتے ہی موبائل سم خریدی۔ موبائل میں سم ڈالی اور =/3000 روپے کا بیلینس کروایا۔ گاڑی میں بیٹھ کر ایک کال کی، کال کے فوری بعد ایک مسیج آیا۔ U فون نے مجھے پیغام بھیجا کہ اس کال کے عوض آپ کے =/15 روپے کٹ گئے لیکن انوکھی بات یہ تھی کہ ٹیکس ان کے علاوہ تھا۔ میں نے نمائندہ کو فون کیا علم ہوا 11 روپے کی کال تھی 4 روپے ٹیکس تھا۔ نمائندہ نے مجھے بیوقوف بناتے ہوئے کہا کہ آپ نے دوسرے نیٹ ورک پر بات کی اس لئے کال کی قیمت اور ٹیکس کی رقم ذائد ہے۔ میں نے نمائندے سے پوچھا کہ کیا میں نے انڈین نیٹ ورک پر کال کی؟ یا پھر آپ پاکستان کا نیٹ ورک نہیں ہیں۔ سوال سے سوال نکلے علم ہوا کہ جس رقم تین ہزار کا میں نے بیلنس کروایا اس میں سے بھی 750 روپے ٹیکس کاٹ لیا گیا۔ اب میں مکمل طور پر چپ ہو گئی اور نمائندہ ہیلو ہیلو کرکے فون بند کر گیا۔
میں یہ سوچ رہی تھی کہ ایک ہی رقم پر دو بار ٹیکس اس ملک کو تو سوپر پاور ہونا چاہیے کیونکہ میں گزشتہ 10 سال سے Du اور اتصلات کی سروس استمعال کر رہی ہوں۔ اتصلات میں میرا سم 5 ہے، میں 100 درہم کا بیلنس کرواؤں تو 125 درہم مجھے ملتے ہیں اور ساتھ انٹرنیشنل 120 منٹ فری ملتے ہیں۔ اور سو درہم کا بیلنس ایک ماہ کے لئے کافی ہوتا ہے۔ جبکہ انٹرنیٹ کے لئے مجھے 30 روپے میں ان_لمیٹڈ وائی فائی، 10 جی بی سپیڈ ملتا ہے۔ پاکستان کی موبائل کمپنیاں اور حکومت مل کر لوگوں کو اتنی بری طرح لوٹ رہی ہیں کہ جس کی مثال قوم_شعیب میں بھی نہیں ملتی۔
آئیں مل کر اگلے چند دن موبائل کمپنیوں کے خلاف ہم ایک آگاہی مہم چلائیں۔ آپ بھی لکھیں اور میرا لکھا شیئر کریں۔
Photo

Post has attachment
Assalam-o-Alaikum We Teach Online Holy Quran to kids,youngs,olds and adults all over the world. If you or your relatives wants to learn Holy Quran.who want to learn with us skype to skype.
Photo
Wait while more posts are being loaded