‏سنو...!!!!

مجھے وہ خواب مت دینا

حقیقت جس کی وحشت ہو

مجھے وہ درد مت دینا

کہ جس میں بس اذیت ہو

مجھے وہ نام مت دینا

جسے لینا قیامت ہو

مجھے وہ نیند مت دینا

جسے اُڑنے کی عادت ہو

میرے بارے میں جب سوچو

توجہ خاص رکھنا تم

مجھے تم سے محبت ہے

بس اِس کا پاس رکھنا تم...

قربت بھی نہیں دل سے اتر بھی نہیں جاتا
وہ شخص کوئی فیصلہ کر بھی نہیں جاتا

آنکھیں ہیں کہ خالی نہیں رہتی ہیں لہو سے
اور زخم جدائی ہے کہ بھر بھی نہیں جاتا

وہ راحت جاں ہے مگر اس در بدری میں
ایسا ہے کہ اب دھیان ادھر بھی نہیں جاتا

ہم دوہری اذیت کے گرفتار مسافر
پاؤں بھی ہیں شل شوق سفر بھی نہیں جاتا

دل کو تری چاہت پہ بھروسہ بھی بہت ہے
اور تجھ سے بچھڑ جانے کا ڈر بھی نہیں جاتا

پاگل ہوئے جاتے ہو فرازؔ اس سے ملے کیا
اتنی سی خوشی سے کوئی مر بھی نہیں جاتا

Post has attachment
Bus Jeeny K Layaq Na Chore Gi
Bus Jeeny K Layaq Na Chore Gi
poetryworldurdu.blogspot.com

Post has shared content

Post has attachment
Managing harsh hot
Photo

Post has attachment

Post has attachment
Photo
Wait while more posts are being loaded