Profile cover photo
Profile photo
Kashan Nawaz
41 followers
41 followers
About
Kashan's posts

Post has shared content
چھوٹا سا عمل اور دانتوں کے بہت سارے مسائل حل مگر کیسے ؟
جاننے کے لیے اس پوسٹ کو ضرور پڑھیں

Chota sa Amal or Danton ky Buhat Sarey Masail Hal mgr Kaisey ?
Janney k liye Is Post ko Zarur Parhein
#small #act #problem #solve
Photo

Post has shared content
Suzuki Ciaz is going to launch in Pakistan
Photo

Post has shared content
Four International Universities to open campuses in Pakistan
Photo

Post has shared content
کڑی پتے بلڈ پریشر کو نارمل رکھنے میں کیسے فائدہ مند ہیں ؟

اس پوسٹ کو زیادہ سے زیادہ شئیر کریں

#curry #leaves #blood #pressure
Photo

Post has shared content

Post has shared content
‪#‎Hadith‬ about ‪#‎Sputum‬
 
‪#‎ramadan2016‬
Photo

Post has shared content
 
=== LATEST VIRAL VIDEO===

The WONDERFUL KITTEN and its BRAVE HEART will make You Laugh.

Watch the BRAVE KITTEN Defending  itself from a big Goat who is attacking it

https://www.youtube.com/watch?v=7qZRuFnJ9As

Post has shared content
Upscale to the world's first 4K smartphone* – your window to a new realm of viewing.
http://bit.ly/GP-4KSmartPhone
Photo

Post has shared content
کیا آپ یہ چاہتے ہیں کہ آپ کا رزق وسیع ہوجائے؟
ہمیشہ باوضو رہو رزق میں وسعت ہوجائے گی
Photo

Post has shared content
٭ماں تجھے سلام٭
وہ دن مجھے آج بھی یاد ھے جب میں ماں کیساتھ بازار گیا ہوا تھا تو کلائی پر باندھنے والی ایک گھڑی پر دل آ گیا۔ میں نے ماں سے ضد کی کہ "مجھے یہ گھڑٰی خرید کر دیں۔۔۔!"، لیکن گھڑی مہنگی ھونے کے سبب ماں نہ دلوا سکی اور میں ضد کرتا روتا ہوا ماں کیساتھ گھر آ گیا۔
گھر آتے ہی گھر سر پر اُٹھا لیا اُس وقت خوش قسمتی یہ تھی کہ والدِ محترم گھر موجود نہ تھے ورنہ اتنا شور مچانے کی ہمت ہی نہ ہوتی اور گھڑی کی حسرت صرف حسرت ہی رہ جاتی پر تقدیر کو کچھ اور ہی منظور تھا۔
پھر ہوا کچھ یوں کہ ماں نے کھانا دیا اور میں نے انکار کیساتھ ساتھ کھانا بھی اُٹھا مارا، بس وہیں ماں کو بھی تھوڑا غصہ آگیا اور آخر انہوں نے کہہ ہی دیا "نہیں کھانا تو نہ کھاؤ، مرو جا کر کہیں۔۔!، تمہارے نخرے اُٹھانے کیلئے ہمارے پاس اتنے فضول پیسے نہیں ہیں دفع ہو جاؤ، اور مجھے دوبارہ اپنی شکل مت دکھانا۔۔!"
بس پھر کیا تھا، ماں کا یہ انداز دیکھ کر میں اپنے غصے پر قابو نہ رکھ سکا اور منہ اُٹھا کر گھر سے چل دیا۔ غالباً سات سے آٹھ گھنٹے بمشکل میں نے گھر سے باہر گزارے ہونگے، لیکن دوسری طرف یہی وہ وقت تھا جو ماں کیلئے زندگی کے سب سے کربناک لمحموں میں سے تھا۔
اس بات کا اندازہ اُس وقت ہوا جب میں نے ایک مسجد کے لاؤڈ اسپیکر سے اپنی ہی گمشدگی کا اعلان سُنا تو گھر کی جانب رُخ کر لیا، راستے میں میرا کزن ملا جو مجھے ہی ڈھونڈنے نکلا تھا، مجھے گھر لے گیا، جاتے ہی کیا دیکھا ماں ایک ہاتھ میں گھڑی اور دوسرے ہاتھ میں کھانا پکڑے، سرخ آنکھوں میں آنسو اور ہونٹوں پر کپکبی لیے بیٹھی میری راہ تک رہی تھیں، مجھے دیکھتے ہی بھاگ کر دیوانہ وار گلے سے لگایا، میرا چہرہ ہاتھ میں پکڑ کر ماتھا چومتے ہوئے گھڑی میری کلائی سے باندھی، اور روتے ہوئے بولی، "کہاں تھے تم دوپہر سے۔۔؟ دیکھو کھانا بھی نہیں کھایا اور کیا حشر کر لیا ہے اپنا۔۔!! اور پھر جو مرنے کی بات مجھے کہی تھی، اپنے اُوپر لے لیتے ہوئے بولی، "اگر میں تیری جدائی ویچ مر جاندی تے فیر ساری عمر تو کَڑیاں ای پانیاں سی۔۔!" (اگر میں تمہاری جدائی میں مر جاتی تو پھر ساری عمر تم گھڑیاں ہی پہنتے)

https://plus.google.com/104451631000268290355/posts?hl=en
Photo
Wait while more posts are being loaded